گولن تحریک جس پر حکومت 15 جولائی کی بغاوت کی کوشش کی پشت پناہی کا الزام لگاتی ہے، اس سے تعلق کے شبے میں جمعرات کو دو علیحدہ علیحدہ تحقیقات کے سلسلے میں کم از کم 28 افراد کو حراست میں لے لیا گیا ہے۔  نیدے کے صوبے میں ہونے والی تحقیات میں 21 افراد کے خلاف وارنٹس جاری کیے گئے۔ ان میں سے اب تک انقرہ اور نیدے میں 14 افراد کو حراست میں لیا گیا ہے۔ زیر حراست افراد میں یونیورسٹی کے طلبہ، اساتذہ، چھوٹے تاجر اور کارپوریٹ ایگزیکٹو شامل ہیں۔ ان افراد پر بائی لاک نامی سمارٹ فون ایپ استعمال کرنے کا الزام ہے جو تحریک کے کارکنان کے درمیان رابظے کا اہم ذریعہ سمجھی جاتی ہے۔

اس دوران اسی دن ازمیر کے سیفری حصار ڈسٹرکٹ میں ایک علیحدہ تحقیقات میں 14 افراد کو حراست میں لیا گیا۔

ترکی میں پہلے ہی 15 جولائ کے بعد سے تحریک سے تعلق کے شبے میں 113260 افراد کو حراست میں لیا جا چکا ہے جبکہ 47000 افراد کو مقدمات سے قبل گرفتار کیا جا چکا ہے۔

Related News